احمد زئی وزیر قبائل اور ٹاؤن شپ کے سینکڑوں رہائشیوں کاگرڈ سٹیشن کا گھیراؤ۔

7d6c36b9-697e-4385-b9fe-d351d931a093.jpg

بنوں: احمد زئی وزیر قبائل اور ٹاؤن شپ کے سینکڑوں رہائشیوں نے گرڈ سٹیشن کا گھیراؤ کرتے ہوئے گرڈ سٹیشن سے ہیوی مشینری لیجانے کی کوشش ناکام بنادی جبکہ بنوں پشاور روڈ کو احتجاجاً بند کرتے ہوئے بنوں ڈویلپمنٹ اتھارٹی میں پراجیکٹ ڈائریکٹر کی تعیناتی کیلئے ایک ہفتے کی ڈیڈ لائن دی۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے ایم پی اے فخراعظم ایڈوکیٹ،تحصیل ڈومیل کے ناظم فدامحمد،تحصیل ممبر فدا اللہ خان، تحصیل ممبر عابد حسین، سینکڑوں مشران کے ہمراہ گرڈ سٹیشن میں گھس گئے اور موقع پر مشینری منتقلی کے کام میں مصروف عملے کو روکااور متنبہ کیا کہ یہ مشینری ہماری لاشوں پر ہی منتقل ہوگی ہم نے ڈیڑھ سال محنت کے بعد 40ایم وی اے ہائی پاور ٹرانسفارمر منظور کرویا اب 20ایم وی اے ٹرانسفارمرکی یہاں سے منتقلی پر کوئی فائدہ نہیں ہوگا فاؤنڈیشن،بریکر اور تیل کا انتظام بھی ہم کریں گے اور اسی ٹرانسفارمر کو اسی گرڈ میں لگایا جائیگا جس پر واپڈا حکام نے یقین دہانی کرائی کہ یہ مشینری اسی گرڈ سٹیشن میں نصب کی جائیگی اور یہاں سے منتقل نہیں کی جائیگی۔

دریں اثناء بنوں ڈویلپمنٹ اتھارٹی میں دو مہینوں سے پراجیکٹ ڈائرکٹر کی عدم تعیناتی کے خلاف ٹاؤن شپ کے مکینوں نے بنوں پشاور روڈ کو ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کیا اور گاڑیوں کی قطاریں لگ گئی ایم پی اے فخراعظم ایڈوکیٹ ا،تحصیل ممبر فارو ق وزیر،ٹاؤن شپ ریزیڈنشنل کمیٹی کے سینئر نائب صدر سلیم خان وزیر نے کہا کہ دو مہینوں سے پی ڈی کی عدم تعیناتی کی وجہ سے بی ڈی اے ملازمین تنخواہوں سے محروم ہیں عوام کے مسائل حل نہیں ہورہے ہیں مسائل میں اضافہ ہورہا ہے تحریک انصاف کی صوبائی حکومت عوام کے مسائل حل کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے پی ڈی کی عدم تعیناتی کی وجہ سے ناجائز کام ہورہے ہیں کرپشن عروج پر ہے اور عوام مسائل کا شکار ہیں۔

ba292940-4512-44c8-98a3-d8536ea4f35b

اس موقع پر تحصیل ڈومیل کے ناظم فدامحمد خان نے مظاہرین سے مذاکرات کئے اور یقین دہانی کرائی کہ پراجیکٹ ڈائریکٹر کی تعیناتی کے حوالے سے ضلعی انتظامیہ سے بات چیت کرکے مطالبہ پورا کیاجائے گا جس پرمظاہرین نے احتجاج ختم کرتے ہوئے دھمکی دی کہ اگر ایک ہفتے کے اندر پراجیکٹ ڈائریکٹر تعینات نہ کیا گیا توہم ضلع بھر کے شاہراہوں کو بند کریں گے اگر اے سی بنوں کو پراجیکٹ ڈائریکٹر کے اضافی اختیارات دیئے گئے ہیں تو وہ فوری طور پر ملازمین اور ٹاؤن شپ کے عوام کے مسائل کے حل کیلئے اقدامات اُٹھائیں۔