قبائلی اضلاع میں بچوں کو پولیو قطریں نہ پلانے کا فیصلہ کیا ہے

JUI-F-Molana-Fazlur-Rehman.jpg

جمعیت علمائے اسلام ف نے قبائلی اضلاع میں بچوں کو پولیو قطریں نہ پلانے کا فیصلہ کیا ہے۔

قاری جہاد شاہ سیکرٹری اطلاعات جے یو آئی ف قبائلی اضلاع  کے مطابق سابقہ فاٹا میں انسداد پولیو مہم سے بائیکاٹ کا فیصلہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ پولیو قطروں کا ماہرین صحت علماء اور سیاسی قائدین کے زیر نگرانی پاکستانی لیبارٹریز میں معائینہ کیا جائے۔

انہوں نے کہا ہے کہ لیبارٹری تجزیہ کی روشنی میں قوم کو پولیو قطروں کی افادیت سے آگاہ کیاجائے اور اس کے علاوہ عوام کی تسلی کے لئے سب سے پہلے ملک کے بیروکریٹس سرعام اپنے بچوں کو قطرے پلائے۔

انہوں نے کہا ہے کہ تحفظات کے خاتمے تک مہم سے بائیکاٹ جاری رہیگا۔ قاری جہاد شاہ نے عام شہریوں سے بھی اپیل کی ہے کہ انسداد پولیو مہم سے بائیکاٹ میں بھر پور تعاون کریں۔

خیال رہے کہ خیبرپختونخوا میں تین روزہ پولیو مہم آج سے شروع ہوگیا ہے۔ حکام کے مطابق مہم کے دوران خیبرپختونخوا کے 27 اضلاع میں پانچ سال سے کم عمر 46 لاکھ بچوں کو قطرے پلانے کا ہدف رکھا گیا ہے۔ پولیو مہم کے لیے 16 ہزار ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔