عافیہ صدیقی کےانتقال کی خبریں؟ حقائق سامنے آگئے

سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پرامریکی جیل میں قید ڈاکٹرعافیہ صدیقی کےانتقال سےمتعلق خبریں گردش کر رہی ہیں۔ تاہم ان خبروں کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔

جبکہ ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کیلئے سرگرم تنظیم عافیہ موومنٹ کی جانب سے جاری ہونے والی ایک سوشل میڈیا پوسٹ میں کہا گیا ہے کہ امریکی قید میں موجود ڈاکٹر عافیہ صدیقی کے حوالے سے متعلق گردش کرنے والی خبریں درست نہیں ہیں۔ سوشل میڈیا صارفین سے اپیل کرتے ہوئے پیغام میں مزید کہا گیا ہیکہ برائے مہربانی افواہیں نہ پھیلائیں. ہم آپکی تشویش کی قدرکرتے ہیں اورجب تک اس بارے میں اس پیج پر پوسٹ نہ کی جائے یا ڈاکٹر عافیہ صدیقی کے خاندان سےتصدیق نہ آجائے اس طرح کی خبریں نہ پھیلائی جائیں.


واضح رہے کی 2016 میں بھی ڈاکٹر عافیہ صدیقی کے انتقال کی خبریں پھیلائی گئی تھیں جن کی تردید عافیہ موومنٹ کے فیس بُک پیج پر شائع پریس ریلیز میں کی گئی تھی. اس وقت جاری کیے گئے پیغام میں کہا گیا تھا کہ “افواہ پھیلانے والوں کا یہ کارنامہ ایک منظم بین الاقوامی سازش ہے جس کے تحت وہ اس طرح کی افواہیں پھیلا کر ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کیلئے جدوجہد کرنے والوں کو مایوس کرنا چاہتے ہیں۔ ڈاکٹر فوزیہ صدیقی نے کہا کہ ماضی میں بھی اس طرح کی افواہیں پھیلا کر ہمیں سخت ذہنی اذیت سے دوچار کیا گیا تھا”